• narrow screen resolution
  • wide screen resolution
  • fluid screen resolution
  • Increase font size
  • Default font size
  • Decrease font size
  • style1 color
  • style2 color
  • style3 color
کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ

رسمی اور غیر رسمی مالیاتی خدمات کے حصول کے لئے ذاتی شناخت کے لئے کچھ دستاویزات کی ضرورت ہوتی ہے جن میں کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ سب سے اہم ہے۔

کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ ایک اہم دستاویز ہے جو کہ تمام اٹھارہ برس سے زائد عمر پاکستانی شہریوں کو جاری کی جاتی ہے۔کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈدراصل باضابطہ طور پر پہ بالغ مرد و عورت کو پاکستانی شہری کے طور پر برقی اندراج کے ذریعے درج کرتا ہے۔ علاوہ ازیں یہ پاسپورٹ ، سفر کی دیگر دستاویزات ، لائسنس ، اجازت نامے، بینک اکاؤنٹ وغیرہ کے حصول کو بھی ممکن بناتا ہے۔ یہ مختلف جگہوں پر شناخت ، گھر کے پتے اور ملازمت وغیرہ کی تصدیق کے لئے درکار ہوتا ہے۔ تاکہ اس امر کی تصدیق کی جاسکے کہ آپ وہی ہیں جسکا آپ دعوی کررہے ہیں۔


کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ کیسے حاصل کیا جائے ؟
کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ نادرہ نامی ادارے کی طرف سے جاری کیا جاتا ہے اور ہر پاکستانی جس کی عمر اٹھارہ سال یا اس سے زیادہ ہے اس کے پاس کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ کا ہونا لازمی ہے۔
کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ نادرہ کے مختلف سینٹرزیا مراکز سے حاصل کیا جاسکتا ہے ۔ نادرہ کے مراکز کے علاوہ نادرہ سوفٹ رجسٹریشن سینٹرز یعنی این ایس آر سی بھی یہ خدمات فراہم کرتے ہیں ۔ نادرہ کی جانب سے درج ذیل خدمات فراہم کی جاتی ہیں۔
نئے کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ کا اجراء
موجودہ کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ میں تصیح و ترامیم
کھو جانے یا چوری ہوجانے کی صورت میں کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ کی نقل کی فراہمی
وفات کی صورت میں کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ کی منسوخی


طریقہِ کار

CNIC

نادرہ کے دفتر میں مرحلہ بہ مرحلہ طریقہِ کار
جب آپ دفتر میں داخل ہوتے ہیں تو آپ کو ایک ٹوکن دیا جاتا ہے اور آپ اپنی ضرورت کے حساب سے رقم کی ادائیگی کرتے ہیں۔ ٹوکن ترتیب وار جاری کئے جاتے ہیں تاکہ آپ کو آپ کی باری پہ طلب کیا جا سکے۔
آپ کو بلائے جانے کے بعد سب سے پہلے وہاں پہ موجود فوٹو گرافر آپ کی تصاویر لیتا ہے۔
اس کے بعد جلد ہی آپ کو انگوٹھے کے نشانات اور دستخط کے لئے طلب کیا جائیگا۔
نادرہ کا موجود نمائندہ آپ کو پکارے گا ااور آپ سے آپ کی معلومات مثلاً پتہ ، تاریخِ پیدائش، ازدواجی حیثیت وغیرہ پوچھے گا۔
پھر آپ کے فارم کو بذریعہِ پرنٹر چھاپا جائیگا ، اور تصدیق کے بعد داخلِ دفتر کرلیا جائیگا۔آآپ کو ایک مہر لگی رسید دی جائیگی ۔ یہ رسید آپ کی دی گئی رقم کو تو ظاہر کرتی ہی ہے مگر اس کے علاوہ اسی رسید کو دکھانے سے آپ مقرر کردہ دن پہ نادرہ کے دفتر سے اپنا کارڈ یا جو بھی دستاویز بننے کو دی ہو وصول کر سکتے ہیں۔

کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ کی درخواست کے ساتھ مندرجہ ذیل دستاویزات بھی جمع کروانی پڑتی ہیں یا دکھانی پڑتی ہیں۔
پیدائش کی سند یا سرٹیفیکیٹ یا
پرانا قومی شناختی کارڈ یا
میٹرک یعنی دسویں جماعت میں کامیابی کی سند یا سرٹیفیکیٹ
خاندان کے افراد کا کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ
وزارتِ داخلہ کی جانب سے جاری کیا گیا شہریت کہ سند یا سرٹیفیکیٹ

اطلاع
ان پڑھ درخواست گزاروں سے عمر کی تصدیق کے لئے پہلی بار کوئی کاغذات طلب نہیں کئے جاتے۔
قبائلی علاقہ جات یعنی فاٹا اور پاٹا کے رہائشیوں کی درخواست صرف ان کے مقامی ڈی اے یوزیعنی ڈیٹا ایکوزیشن یونٹس پر وصول کی جاتی ہیں اور انکے فارم کی تصدیق انکے متعلقہ پولیٹیکل ایجنٹ یعنی پی اے یااسسٹنٹ پولیٹیکل ایجنٹیعنی اے پی اے کرتے ہیں۔
سپردگی کے مختلف طریقوں، خدمت کا معاوضہ اور نادرہ کے دفاتر اور دیگر معلومات کے لئے آپ نادرہ کی ویب سائٹ ملاحظہ کرسکتے ہیں۔ ویب سائٹ کا پتہ یہ ہے۔
http://www.nadra.gov.pk/