• narrow screen resolution
  • wide screen resolution
  • fluid screen resolution
  • Increase font size
  • Default font size
  • Decrease font size
  • style1 color
  • style2 color
  • style3 color
بجٹ کے اندر محدود رہنا

 
بجٹ (میزانیہ ) کی تیاری ایک سیدھا سا دھا طریقہ ہے اور اسے اگر ایک بار دیکھا جائے کہ کسطرح ترتیب دیا جاتا ہے ۔ تقریباً کوئی بھی ایک بجٹ تیار کر سکتاہے ۔ مگر بعد ازاں عملدرآمد اور اسکے ساتھ جڑُ ے رہنا بہت مشکل ہو سکتاہے ۔ اسکے قواعد و ضوابط ہوتے ہیں ۔ آپ بجٹ کے ہر حصے کا خیال ضرور رکھیں گے یعنی مالی امداد کو متعین کرنا، اخراجات کو قابو میں رکھنا اور اپنی ضروریات کو پورا کر تے ہوئے بچت کرنا ، اپنے بجٹ کے اندر رہتے ہوئے، درج ذیل تر کیبیں عام و پیشہ مسائل سُلجھا سکتی ہیں

  مسئلہ (1):ماہانہ غیر تسلسل کی آمدنی
اگر ایک شخص تنخواہ دار نہیں ہے تو ایسے لوگوں کو پاکستان میں شدید تر ین مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔ آمدن و خرچ دونو ں ماہ در ماہ و موسم تا موسم میں اتار چڑھاؤ دیکھتے ہیں ۔ تاہم کچھ حد تک ان کی پیشگی خبر دینا ممکن ہے ۔ بغرض مال اپنے آپ سے سوال کریں : سال کے کس وقت آپ کو ایک تھوڑی سے زیاد ہ رقم درکار ہو گی ؟آپ کو اسکی ضرورت کس وقت پڑے گی ؟
آپ ایک کلینڈر (سالنامہ ) کا استعمال کریں ۔ جس میں آپ آمدنی و خرچ ضروریات کے لحاظ سے جیسے مختلف وقتوں ، سرگرمیاں، مذہبی و سماجی واقعات و ساتھ ساتھ زندگی کے رونما ہونے والے حالات مثلاًپیدائش ،واقعات، کوبخوبی ملا حظہ کر سکتے ہوں ۔ بجٹ کو بناتے وقت اور آمدنی و خرچ کے تخمینہ کے رجحانات ، اس کلینڈڑ کو آپ ایک موثر ہتھیار کے طور پر استعمال کر سکتے ہیں ۔

مسئلہ (2) :بجٹ کے اندر محدود رہنا
ایک گھرانہ افراط زر کے چڑھاؤ اور ذمہ داریوں اور آئے دن کی وسعت سے اپنے بجٹ کے اندر محدود ہو کہ کسطرح نبردآزما ہو گا؟جبکہ یہ کام کرنے میں آسان نہیں ہے ۔ مگر آپکی مالی فلاح و بہبود کیلئے اسکی اہمیت بہت وزن رکھتی ہے ۔
اگر آپ تین یا چار قسم کے مختلف دالوں کو یکجا کر دیں تو بعد میں ان کو علیحدہ کر نا مشکل ترین کام ہے ! والوں کی ترتیب، وقت سے پیشتر ہونی چاہیے تاکہ بعد ازاں علیحدہ گی میں مشکل کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔ اگر آپ مختلف دالوں کو ایک برتن میں رکھیں گے تو جب ایک قسم کی دال پکانے کی ضرورت ہوگی تو ان کو کسطرح علیحدہ کر سکتے ہو۔ گھر کے اخرجات کی مثال دال ، جیسی ہے ۔ گھر یلو اخراجات کی درجہ بندی سے ، اور انکو الگ الگ حصوں میں رکھنے سے ایک گرمہ کے بجٹ بننے میں مدد ملتی ہے ۔ اور اس بات کو یقینی بنائیں کہ تمام قسم کے اخراجات الگ الگ ہوں اور ایک دوسرے کے ساتھ گڈمڈ نہ ہوں ۔ اس طریقے سے ایک شخص غیر متوقع زیادتی کی طرف بڑھ رہا ہے تو وہ اسے قابو میں کر کے دوسرے اخراجات کو مد نظر رکھ سکتا ہے۔
ایک سادہ و موثر "لفافے کاگرُ"آزمائیں ۔ اپنے گھریلو اخراجات کی درج ذیل پانچ درجہ بند یوں میں تشکیل دیں کاروباری اخراجات، گھریلو خرچ، قرض کی واپسی، قلیل المدت کا خرچ، طویل المدت خرچ۔
اپنے رقم کی بہتر منصوبہ بندی کیلئے ضروری ہے کہ آپ ہر ماہ کے آغاز میں آپ ان تمام لفافوں (حصوں) کیلئے رقم مختص کریں ۔ پھر رقم ان میں تقسیم کردیں ۔یہ ضروری نہیں ہے کہ بچت ہزاروں میں ہو ۔ طویل و قلیل المدت احداف کیلئے تھوڑی رقم دے دینا بڑا معنی رکھتی ہے ۔
یہ ایک طریقہ عظیم ہے کہ اپنی بچت کو علیحدہ اور پہنچ سے دور رکھیں تاکہ یہ خرچ نہ ہو اور اپنے اخراجات پر نظر رکھ سکیں ۔

مسئلہ 3:اخراجات جو آمدنی سے تجاوز کر جائیں
عوام میں تیسرا اور بہت مشترکہ مسئلہ سامنے آیا جب اخراجات آمدنی سے بڑھ جائیں تو کیا کرنا چاہیے؟یہ مسئلہ اکثر مشترکہ دیکھنے میں آیا ہے کہ اب بجٹ کے ساتھ چمٹ جائیں اور اپنے خرچ پر نظر رکھتے رہیں ۔ اسکے دو حل ہیں جو براہ راست آپکی دسترس میں ہیں یا تو زیادہ رقم کمائیں یا خرچہ کرنا کم کر دیں ۔
تیسرا اور آخری حل یہ ہے جو آپکی ادھار کی قوت ہے اور طریقہ قرض اور رقم کا استعمال ۔ تاہم اگر اس طرح کی نوبت آن پڑے تو ہماری سفارشات برائے ڈیبٹ مینجمنٹ کا مطالعہ ضرور کیجئے گا۔
ملک گیر مالیاتی خواندگی پروگرام(NFLP)کی عملی تر بیت کے دوران ہمارے تربیت کاروں نے ملک بھر کے کم آمدنی دیہی آبادی سے سوالات کیے۔ کچھ بہت اچھی تجاویز منظر عام پر آئیں ۔ انہیں ذرا دیکھئے کہ درج ذیل میں کونسی آپکی ذوق معیارواصول ماہرانہ سے مطابقت رکھتی ہیں ۔

ذرائع جس میں ایک گھرانہ زیادہ کماسکتا ہے

  • کاشتکاروں کیلئے یہ تجویز کیا جاتا ہے کہ وہ فصل کی اگائی میں تبدیلی لائیں۔ اس خیال سے کہ آپکی سبزیاں بازار میں فوری فروخت ہو گی گھر یلو آمدنی کا سبب بنے گی ۔
  • اپنی مہارت کا استعمال کریں ۔ یعنی آپ نے اپنی بیٹی ؍ بیٹا کو گود لینے کیلئے ابھارا یا اپنے پڑو س کے بچوں کو خصوصی پڑھائی  کی پیشکش کی ؟شاید آپ یا آپکی زوجہ اپنی تحریری مہارت یا جزوقتی کام غیر سرکاری ادارے کیلئے کر سکتی ہیں ؟
  • جہاں موجودہ کام کر رہے ہیں زیادہ معاوضہ کی طلب کریں ۔ لوگ بتانے سے گھبراتے ہیں ۔ آپ سادہ سی بات نہیں کہہ سکتے ۔ اگر بُرا ہو ا تو نہ کر دے گا۔ آپ ملاقات کا وقت مانگیں ۔
  • اپنے نکات کو مجتمع کریں ۔ جو زیادہ تر آپکے کام کی کار کر دگی کے بارے میں ہوں کہ مجھے رقم ضرورت ہے اور دیکھیں کیا وقوع ہو تا ہے ۔ یہ ایک آجر کیلئے مشکل امر ہے کہ وہ نفی میں جواب دے جب آپ گزارش کر ینگے ۔ یہ آپ کے لیے لازم ہے کہ آپ پہلی فرصت میں انُکے گوش گزار دیں ۔

ذرائع جس میں ایک گھرانہ کم خرچ کر سکتا ہے

  • گھریلو خریداری ایک بارتھوک دوکان سے کریں بجائے قرض پر ۔
  • منصوبہ تیاررکھیں قیمتیں گرنے پراشیائے ضرورت خرید یں ۔
  • اور طالب علموں سے استعمال شدہ کتابیں خریدیں۔
  • اپنی ضرورت کیلئے گھر میں کچن با غیچہ کا آغاز کریں۔ خوداُگائیں اور استعمال میں لائیں ۔
  •  گھر میں ہر ایک کو ملازم رکھیں تاکہ گھر یلو خرچہ کم ہو سکے ۔
  • گھر سے باہر جانے کے بھی منصوبے اختراع کریں مثلاً ساحل سمندر پکنک منانا ملک کے کئی اچھے پارکوں میں جانا ، اپنے گھر کے پکے ہوئے کھانے اور سینڈو چز، اخراجات میں نہایت کمی کرتے ہیں ، جبکہ اہل و عیال سے لطف اند وزی کے بہترین مواقع میسر آتے ہیں ۔
  • کم رقم پاس یا رقم کو محفوظ جگہ رکھیں تاکہ شاہ خرچوں سے بچ سکیں ۔